کرفیو یامکمل لاک ڈاؤن ہونے پرپاک فوج ہرگھر میں امداد فراہم کرے گی

اسلام آباد (صوابی ٹائمز نیوز ) کمانڈ اینڈ کنٹرول میں ایک اہم اجلاس منعقد کیا گیا ،اجلاس میں وفاقی وزراء نے شرکت کی، آرمی چیف بھی اس اجلاس کا حصہ تھے اجلاس میں اس بات پر اتفاق ہوا کہ اگر ملک میں مکمل لاک ڈاؤن یا کرفیو ہوتا ہے تو آرمی کے جوان ہرگھر میں امداد فراہم کرے گے۔ لیفٹیننٹ جنرل محمود زمان کو کوارڈینئٹر لگا دیا گیا ہے۔ کورونا وائرس کے حوالے سے حکومت کے اٹھائے گئے اقدامات کی آرمی چیف نے تائید کر دی ہے۔ آرمی چیف نے اجلاس میں کہا کہ پاک فوج کسی شہری کو تنہا نہیں چھوڑے گی ، ہر گلی میں امداد فراہم کی جائے گی اور نہ ہی کسی کے رنگ ونسل کو مدنظر رکھا جائے گا ہر شخص کی مدد کی جائے گی۔پاک فوج نے عوام کو امداد فراہم کرنے کیلئے پلاننگ شروع کردی ہے۔ اگر آگے جا کر ملک میں مکمل لاک ڈاؤن کیا جا تا ہے توپاک فوج عوام کو ہر ممکن امداد فراہم کرے گی۔ پاک فوج سپروائز کرے گی۔ آرمی چیف بھی حکومت فیصلوں کے ساتھ متفق ہیں اور آئندہ بھی مل کر فیصلے کرنے کا عزم ظاہر کیااضح رہے اس سے قبل پاک فوج کے تمام سٹاف نے کورونا ریلیف فنڈ میں حصہ ڈالنے کا اعلان بھی کیا تھا ۔ ترجمان پاک فوج میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا تھا کہ آرمی چیف، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی ایک ماہ کی تنخواہ جبکہ باقی سٹاف اپنے عہدے کے مطابق تنخواہ کورونا ریلیف فنڈ میں عطیہ کرینگے۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کورونا ریلیف فنڈ میں ایک ماہ کی تنخواہ دی۔اسی طرح چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی نے بھی ایک ماہ کی تنخواہ کورونا ریلیف فنڈ میں عطیہ کردی ہے۔ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ اسپیشل پےاسکیل 11سے14 تک کے ملازمین 3 دن کی تنخواہ عطیہ کرینگے۔ اسپیشل پےاسکیل 1 سے7 تک کے ملازمین ایک روز کی تنخواہ عطیہ کرینگے۔ اسپیشل پےاسکیل 8 سے10 تک کے ملازمین 2 روز کی تنخواہ عطیہ کریں گے۔این سی اے اور اسٹریٹجک پلانز ڈویژنز کورونا فنڈ میں تنخواہ عطیہ کریں گے۔ اسی طرح سائنسدانوں، انجینئرز ودیگر ملازمین نے اپنی تنخواہوں کا کچھ حصہ عطیہ کرینگے۔

Advertisements
Sponsored by Rehman Medical Center

اپنا تبصرہ بھیجیں