ہسپتالوں میں غیرقانونی انٹری فیس کے خلاف صوبائی اسمبلی میں قرارداد جمع

پشاور(صوابی ٹائمز نیوز)ہسپتالوں کی کار پارکنگ میں مریضوں اور ان کے تیمارداروں سے کارپارکنگ فیس وصولی کے خلاف جماعت اسلامی کے ممبران صوبائی نےاسمبلی سیکرٹریٹ میں قرارداد جمع کرادی۔کچھ روز پہلے صوابی ٹائمز نے ہسپتالوں میں غیرقانونی انٹری فیس کے خلاف آواز اٹھائی تھی. جس پر ایکشن لیتے ہوئے اس کے خلاف قرارداد صوبائی اسمبلی میں جمع کرائی گئی.
یہ بھی پڑھیں: صوابی کے ہسپتالوں میں انٹری فیس ختم کی جائے ،عوامی حلقے
لوگ مجبوری اور ضرورت کے تحت ہسپتالوں کا رخ کرتے ہیں ان سے کارپارکنگ فیس وصولی مریضوں کو مذید پریشان کرنا ھے۔سراج الدین خان ایم پی اےباجوڑ سے جماعت اسلامی کے ممبر صوبائی اسمبلی حاجی سراج الدین خان اور خاتون ممبر صوبائی اسمبلی حمیراخاتون نے پیر کے روز صوبائی اسمبلی سیکرٹریٹ میں قرارداد جمع کیا جس میں اراکین صوبائی اسمبلی نے موقف اپنایا ھے کہ صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں آنے والے مریض اور شہری کسی خرید وفروحت یا دیگر مالی مفاد کے لئے نہیں بلکہ انتہائی ضرورت اور مجبوری کی وجہ سے ہسپتالوں کا رخ کرتے ہیں چونکہ کسی ہسپتال میں آنے والے مریض اور ان کے تیمار دار ضرور مند ہوتے ہیں اور ہسپتال آنا ان کی انتہائی مجبوری ہوتی ہے ایسے میں ان سے کارپارکنگ کی صورت میں فیس وصول کرنا ان کی پریشانی میں مذید اضافہ کرنے کے مترادف ہے اس لئے یہ معزز ایوان صوبائی حکومت سے سفارش کرتا ہے کہ صوبہ بھر کے تمام سرکاری ہسپتالوں میں قائم کارپارکنگ میں مریضوں اور ان کے تیمارداروں سے کارپارکنگ فیس کی وصولی بند کرکے عوام کو ریلیف فراہم کیا جائے۔

Advertisements
Sponsored by Rehman Medical Center

اپنا تبصرہ بھیجیں