19 سال بعد پی آئی اے کو امریکا کیلئے براہ راست پروازکی اجازت

اسلام آباد (مانٹرنگ ڈسک) امریکا نے پابندی اٹھا لی، 19 سال بعد پی آئی اے کا امریکا کیلئے براہ راست پروازوں کے آغاز کا اعلان، پی آئی اے براہ راست پروازوں کا آغاز رواں برس مئی سے کرے گی، ابتدائی طور پر ہفتہ وار کل 3 پروازیں چلائی جائیں گی۔ تفصیلات کے مطابق امریکا نے 19 سال تک پاکستان سے اپنے ملک کیلئے براہ راست پروازوں پر پابندی عائد کیے رکھی تھی جسے اب ختم کر دیا گیا ہے۔بتایا گیا ہے کہ 2001 میں نائن الیون حملوں کے بعد امریکی حکام نے پاکستان سے امریکا کیلئے براہ راست پروازوں پر پابندی عائد کر دی تھی۔ یہ پابندی 19 سال تک برقرار رہی جو اب ختم کر دی گئی ہے۔ پاکستانی حکام گزشتہ 2 برسوں سے کوشش کر رہے تھے کہ امریکا کو پابندی کے خاتمے کیلئے راضی کیا جائے۔ دونوں ممالک کے تعلقات میں بہتری آنے اور پاکستان کے حالات بہتر ہونے کے بعد بالآخر امریکی حکام نے اجازت دے دی ہے کہ اب پاکستان سے امریکا کیلئے براہ راست پروازیں چلائی جا سکتی ہیں۔اس حوالے سے مزید بتایا گیا ہے کہ قومی ائیرلائن پی آئی اے نے امریکا کیلئے براہ راست پروازوں کا آپریشن شروع کرنے کی تیاریوں کا آغاز کر دیا ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ پی آئی اے مئی 2020 سے امریکا کیلئے براہ راست پروازوں کو آغاز کر دے گی۔ ابتدائی طور پر پی آئی اے امریکا کیلئے ہفتہ وار 3 براہ راست پروازیں چلائے گی۔ بعد ازاں پروازوں کی تعداد میں اضافہ کر دیا جائے گا۔ امریکا کیلئے براہ راست پروازیں چلانے سے پی آئی اے کو اچھا خاصا مالی فائدہ ہوگا۔

Advertisements
Sponsored by Shayan Bakers

اپنا تبصرہ بھیجیں