ملائیشیا سے شادی کے لیے آنے والا سکھ نوجوان پشاور میں قتل

پشاور: چمکنی میں نامعلوم افراد نے ملائیشیا سے اپنی شادی کے لیے آنے والے سکھ نوجوان کو قتل کردیا۔ پشاور کے تھانہ چمکنی کی حدود سے ایک شخص کی گولیوں سے چھلنی لاش برآمد ہوئی ہے۔ جس کی شناخت رویندرا سنگھ کے نام سے ہوئی ہے۔ لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے قریبی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

Advertisements
Sponsored by Al-Faisal Schools

پولیس کا کہنا ہے کہ مقتول کا تعلق شانگلہ سے تھا اور وہ ملائیشیا میں کاروبار کرتا تھا۔ اس کی چند روز بعد شادی تھی، اسی سلسلے میں وہ اپنی خریداری کے لیے پشاور آیا تھا، نامعلوم افراد نے رویندر کو قتل کرنے کے بعد اسی کے فون سے مقتول کے گھر والوں کو باقاعدہ خبر بھی دی ہے جس سے اندازہ ہوتا ہے کہ قتل کی وجہ کوئی دشمنی بھی ہوسکتی ہے۔ مقتول رویندر سنگھ کے بھائی تویندر سنگھ ولد اتم رام سنگھ کی مدعیت میں نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں